بنیادی صفحہ / خبریں / بازار / کوسہ ممبرا میں تقویٰ جویلرس کے شو روم کا آغاز،معززین شہر کی شرکت

کوسہ ممبرا میں تقویٰ جویلرس کے شو روم کا آغاز،معززین شہر کی شرکت

تقویٰ جویلرس کے افتتاحی پروگرام سے قبل اسرار احمد خریداروں کا خیر مقدم کرتے ہوئے (تصویر:معیشت)

تقویٰ جویلرس کے افتتاحی پروگرام سے قبل اسرار احمد خریداروں کا خیر مقدم کرتے ہوئے (تصویر:معیشت)

ممبرا(معیشت نیوز) کوسہ ممبرا میں تقویٰ جویلرس کے ایک نئے برانچ کا شاندار آغازہوگیا جس میں کثیر تعداد میں خریداروں کے ساتھ معززین شہر نے شرکت کی۔حضرت مولانا منیر صاحب قبلہ دامت برکاتہم کی دعا اور مختصر خطاب سے افتتاحی پروگرام کا آغاز ہوا۔ مولانا موصوف نے دعا سے قبل خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’عبادات کے ساتھ معاملات کی درستگی انتہائی ضروری ہے۔ہم تجارت میں آگے بڑھیں حلال روزی کمائیں اس کی فکر کرنا انتہائی ضروری ہے۔‘‘ آئی پی ایس آفیسراور تھانے کے ایڈیشنل پولس کمشنر پرتاپ رامچندر دیگائونکر نے اپنے خطاب میں کہا کہ ’’یہ پہلا موقع ہے جب میں کسی مسلم کے جویلری شاپ کے افتتاحی پروگرام میں شریک ہورہا ہوں۔خوشی اس بات کی ہے کہ کبھی جویلری کی تجارت کسی ایک سماج کا حصہ تھا لیکن اب اس میں مسلمان بھی شامل ہو رہے ہیںجو اپنے آپ میں خوشی کا سبب ہے۔‘‘انہوں نے کہا کہ ’’پونہ کےانعامدار خاندان کو میں بہت قریب سے جانتا ہوں۔یہ لوگ تعلیمی خدمات بھی انجام دے رہے ہیں اور اب تجارت میں بھی آگے آرہے ہیں،ان کو جس قدر قریب سے میں نے دیکھا ہے انہیں انتہائی بہتر پایا ہے‘‘۔مولانا فیصل مدنی نےاپنے خطاب میں کہا کہ ’’تجارت میں برکت اسی وقت ہوتی ہے جب ایمانداری کے ساتھ لوگ تجارت کریں اور خوشی ہے کہ یہاں اس بات کی کوشش کی جارہی ہے۔ ‘‘جمعیۃ علماء ممبرا کے ذمہ دارمولانا عبد الوہاب نے جہاں ممبرا میں جویلری شاپ کی ضرورت کا تذکرہ کرتے ہوئے تقویٰ جویلرس کی تعریف کی وہیں یہ بھی کہا کہ ’’اسرار احمد نے جس طرح سے تجارت کو فروغ دیا ہے یہ انہیں کا کارنامہ ہے۔‘‘

تقویٰ جویلرس کے مالک اسرار احمد کا ان کے رفقاء خیر مقدم کرتے ہوئے

تقویٰ جویلرس کے مالک اسرار احمد کا ان کے رفقاء خیر مقدم کرتے ہوئے

واضح رہے کہ مقامی ایم ایل اے ڈاکٹر جیتندر اوہاڈ نے بھی شرکت کی اور اپنی نیک خواہشات پیش کیں۔ تقویٰ جویلرس کے مالک اسرار احمد ممبرا والے کے مطابق’’ممبرا کثیر مسلم آبادی والا علاقہ ہے جہاں آبادی کی مناسبت سے جویلری کی بہت کم دکانیں ہیں ۔لہذاجب ہم نے میرا رڈ، جوگیشوری اور ملاڈ میں اپنا شو روم قائم کیا تو محسوس ہوا کہ ممبرا میں بھی اس کی اتنی ہی ضرورت ہے جتنی کہ دوسری جگہوں پر تھی لہذا جیسے ہی ہم نے اس شو روم کوکھولنے کی بات یہاں کے لوگوں کے گوش گذار کی تو انہوں نے اسے انتہائی ضروری قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ نہ صرف علاقے کی ضرورت ہے بلکہ اس پورے خطے میں آباد لوگوںکو ایک ایسا شو روم بھی ملےگا جہاں جاکر مناسب قیمت پر لوگ باگ زیورات خرید سکیں گے‘‘۔

تعارف: نمائندہ خصوصی

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*