مہاراشٹر : ’منی لاک ڈاؤن ،سخت پابندیاں نافذ، دو ویکسین والے ہی سفر کرسکیں گے

Maharashtra-Lockdown
lockdown-in-Mumbai

ممبئی:(ایجنسی)

مہاراشٹرمیں بڑھتے ہوئے کورونا کے پیش نظر ریاستی حکومت نے اہم فیصلے لیے ہیں۔ ریاستی حکومت کی جانب سے کورونا انفیکشن کا سلسلہ توڑنے کے لیے نئے ضابطے جاری کیے گئے ہیں۔ درحقیقت، نئے قوانین کے لیے ریاستی حکومت اور انتظامیہ کے سینئر افسران کی میٹنگیں جاری تھیں۔ آخر کار وزیر اعلیٰ ادھو ٹھاکرے نے اس سلسلے میں حکام کی طرف سے بھیجی گئی رپورٹ پر فیصلہ کیا ہے۔ ریاستی حکومت نے اس کے بعد سے کورونا کے پس منظر پر سخت پابندیاں عائد کر دی ہیں۔

 

 

 

مہاراشٹر میں کورونا کے پیش نظر رات کے کرفیو کا فیصلہ کیا ہے۔ رات 11بجے سے صبح 5بجے تک کرفیو کا اعلان کیا گیا ہے۔ریاستی حکومت کے نئے فیصلے اصل میں کیا ہیں؟کل آدھی رات سے ریاست میں سخت پابندیاں،رات 11 بجے سے صبح 5 بجے تک ریاست کے تمام حصوں میں کرفیو، نائٹ کرفیو کا اعلان کر دیا گیا۔ 5سے زیادہ لوگ اکٹھے نہیں ہو سکتے۔صرف ضروری خدمات رات کو جاری رہیں گی۔ تھیٹر، سنیما ہال50 فیصد،ریاست میں ہوٹل اور ریستوراں رات 10بجے سے صبح 8بجے تک بند رہیں گے۔ ہوٹل 50 فیصدصلاحیت پر جاری رہے گا۔

ریاست کے باہر سے مہاراشٹر آنے والوں کے لیے72گھنٹے پہلے RTPCR ٹیسٹ لازمی ہے۔ میدان، باغات، سیاحتی مقامات بند،اسکول اور کالج 15فروری تک بند، سیلون اور پرائیویٹ آفس 50 فیصد صلاحیت کے ساتھ شروع ہوںگے،جن لوگوں کو مکمل طور پر ویکسین لگائی گئی ہے انہیں پبلک بس سے سفر کرنے کی اجازت ہے۔سوئمنگ پول، اسپا، جم مکمل طور پر بند،زائرین کو بغیر اجازت سرکاری دفاتر میں داخل ہونے کی اجازت نہیں ہے۔سرکاری اور پرائیویٹ دفاتر میں50 فیصدحاضری لازمی ہے۔دفتر میں صرف ان ملازمین کو جانے کی اجازت ہے جنہوں نے کورونا ویکسین کی دونوں خوراکیں لی ہیں۔ شادی کی تقریب میں صرف 50لوگ شرکت کر سکتے ہیں۔20 افراد جنازے میں شریک ہوسکتے ہیں۔سیاسی،مذہبی اور عوامی تقریبات میں 50افراد کی حاضری کی شرط مہاراشٹر حکومت نے لگائی ہے ۔ریاست میں مذکورہ اصول وضوابط کا اتوار سے نفاذ ہوجائے گا۔

 

 

 

 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *


ہمارے بارے میں

www.maeeshat.in پر ہم اقلیتوں خصوصا  مسلم دنیا میں کاروبار کو متعارف کرانے اور فروغ دینے کا ارادہ رکھتے ہیں جو حلال اور حرام کے حوالے سے اپنے آپ کو ممتاز کرتے ہیں۔ شروع سے ہی اس جریدے/ویب سائٹ نے مسلمان صنعت کاروں اور تاجروں کو قائل کیا ہے کہ وہ ہندوستانی معیشت کو مضبوط بنائیں اور دوسرے کارپوریٹ کے ساتھ اپنے تعلقات کو مزید فروغ دیں۔


CONTACT US

CALL US ANYTIME




نیوز لیٹر