بنیادی صفحہ / بازار / سوشل میڈیا / فیس بک کی خفیہ تحقیق پر تنازعہ

فیس بک کی خفیہ تحقیق پر تنازعہ

نئی دہلی، یکم جولائی (یو این بی): سوشل نیٹورکنگ ویب سائٹ فیس بک نے ایک تحقیق کے لیے اپنے تقریباً 7,00,000 اکائونٹ ہولڈروں کے ’نیوز فیڈ‘ میں خفیہ طریقے سے چھیڑ چھاڑ کی۔ اس سلسلے میں ایک رپورٹ سامنے آنے کے بعد فیس بک معاملہ پر نیا تنازعہ کھڑا ہو گیا ہے۔ فیس بک نے ’جذباتی تبدیلی‘ سے متعلق تحقیق کرنے کے لیے اپنے اکائونٹ ہولڈروں کے ’نیوز فیڈ‘ میں گڑبڑی کی تھی۔ اس کے ذریعہ وہ یہ جاننا چاہتی تھی کہ الگ الگ طرح کے ’نیوز فیڈ‘ کا اکائونٹ ہولڈروں کے رویہ پر کیسا اثر ہوتا ہے۔ اس بارے میں پروسیڈنگز آف دی نیشنل اکیڈمی آف سائنسز آف دی یو ایس اے میں ایک تحریر شائع ہوا ہے۔ اس کے مطابق یہ تحقیق فیس بک، کورنیل یونیورسٹی اور یونیورسٹی آف کیلیفورنیا کے محققین نے 2012 میں کیا۔ سوشل نیٹورکنگ سائٹوں پر فیس بک کے اس قدم کی پرزور تنقید ہو رہی ہے۔

تعارف: نمائندہ خصوصی

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*