دنیا کو مشن ‘لائف’ کو عالمی تحریک بنانا چاہیے: مودی

modi new
national startup day

ا ۔نئی دہلی

وزیر اعظم نریندر مودی نے پیر کو ورلڈ اکنامک فورم کو خطاب کرتے ہوئے دنیا کو ہندوستان کی کامیابیوں کی ایک جھلک دکھائی۔ ڈیووس ایجنڈا سمٹ سے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے خطاب کرتے ہوئے، پی ایم مودی نے کہاکہ “ہندوستانی نوجوانوں میں کاروباری صلاحیت آج ایک نئی بلندی پر ہے۔ اس کا نمونہ ملک میںشروع ہوئے اسٹارٹ اپ ہیں۔مودی نے طرز زندگی کی وجہ سے آب و ہوا کے لیے پیدا ہونے والے چیلنجوں کے بارے میں دنیا کو خبردار کیا۔ انہوں نے کہا، ‘تھرو وے’ ثقافت اور صارفیت آب و ہوا کے لیے زیادہ سنگین چیلنجز کا باعث ہیں۔ انہوں نے دنیا سے مشن ‘لائف’ کی اپیل کی۔ انہوں نے کہا کہ یہ بہت ضروری ہے کہ مشن ‘لائف’ ایک عالمی تحریک بن جائے۔ تب ہی ہم آنے والی نسلوں کو محفوظ رکھ سکیں گے۔

سب نے کورونا کے دور میں ہندوستان کا ‘ایک زمین، ایک صحت’ ویژن دیکھا

انہوں نے کہا کہ کورونا کے دور میں پوری دنیا نے دیکھا کہ کس طرح ہندوستان نے ون ارتھ۔ون ہیلتھ یعنی کہ ‘ایک زمین، ایک صحت’ کے وژن پر عمل کرتے ہوئے سب کی مدد کی۔ کئی ممالک کو ضروری ادویات، ویکسین دے کر لاکھوں جانیں بچائی جا چکی ہیں۔ وزیر اعظم نے کہا کہ ہندوستان جیسی مضبوط جمہوریت نے پوری دنیا کو ایک خوبصورت تحفہ دیا ہے، اس میں امیدوں کا پوٹلا ہے۔ اس بنڈل میں، ہم ہندوستانیوں کا جمہوریت پر اٹل اعتماد ہے۔ اسی میں ہندوستانیوں کا مزاج اور ہنر پوشیدہ ہے۔

ہندوستان کی کامیابیوں کو دنیا کے سامنے شمار کیا۔

آج ہندوستان دنیا میں ادویات کا تیسرا سب سے بڑا پیدا کرنے والا ملک ہے

آج ہندوستان دنیا میں ریکارڈ سافٹ ویئر انجینئر بھیج رہا ہے

ہندوستان میں 50 لاکھ سے زیادہ سافٹ ویئر ڈویلپر کام کر رہے ہیں

آج ہندوستان ایک تنگاوالا کی تعداد میں دنیا میں تیسرے نمبر پر ہے

پچھلے 6 مہینوں میں 10 ہزار سے زیادہ اسٹارٹ اپس رجسٹرڈ ہوئے ہیں۔

ہندوستان کے پاس دنیا کا سب سے بڑا اور کامیاب ڈیجیٹل ادائیگیوں کا پلیٹ فارم ہے۔

صرف پچھلے مہینے میں، ہندوستان میں یو پی آئی کے ذریعے 4.4 بلین لین دین ہوئے ہیں ہندوستان میں کاروبار کے لیے بنائے گئے ماحول کے بارے میں آگاہ کیا۔ مودی نے ہندوستان کاروبار کے لیے بنائے جانے والے ماحول کے بارے میں سب کو آگاہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ آج، ہندوستان کاروبار کرنے میں آسانی کو فروغ دے رہا ہے، حکومتی مداخلت کو کم سے کم کر رہا ہے۔ ہندوستان نے اپنے کارپوریٹ ٹیکس کو بھی آسان کر دیا ہے۔ اس نے اسے دنیا میں سب سے زیادہ مسابقتی بنا دیا ہے۔ اختراع، نئی ٹکنالوجی کے مطابق ڈھالنے کی صلاحیت، ہندوستانیوں میں کاروبار کا جذبہ ہمارے ہر عالمی شراکت دار کو نئی توانائی دے سکتا ہے۔

لہذا ہندوستان میں سرمایہ کاری کرنے کا یہ بہترین وقت ہے۔ 2014 میں جہاں ہندوستان میں چند سو رجسٹرڈ اسٹارٹ اپس تھے۔ اس کے ساتھ ہی آج ان کی تعداد 60 ہزار سے تجاوز کر گئی ہے۔ جن میں سے 40 سے زیادہ 2021 میں ہی بنائے گئے تھے۔

عالمی اداروں میں اصلاحات لانی ہوں گی

،  وزیراعظم نے کہا کہ آج کی عالمی صورتحال کو دیکھتے ہوئے سوال یہ ہے کہ کیا کثیرالجہتی ادارے نئے عالمی نظام اور نئے چیلنجز سے نمٹنے کے لیے تیار ہیں؟ جب یہ ادارے بنے تو صورتحال مختلف تھی۔ آج حالات مختلف ہیں۔ لہٰذا ہر جمہوری ملک کی ذمہ داری ہے کہ وہ ان اداروں کی بہتری پر زور دے تاکہ انہیں حال اور مستقبل کے چیلنجز کا مقابلہ کرنے کے قابل بنایا جا سکے۔ اس چوٹی کانفرنس میں پی ایم مودی کے علاوہ کئی سربراہان مملکت نے شرکت کی۔ ان میں جاپان کے وزیر اعظم کشیدا فومیو، آسٹریلیا کے وزیر اعظم سکاٹ موریسن، انڈونیشیا کے صدر جوکو ویدوڈو، اسرائیل کے نفتالی بینیٹ اور چینی صدر شی جن پنگ کے علاوہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوٹیرس، امریکی وزیر خزانہ جینٹ ایل یلن اور کئی عالمی رہنما شامل تھے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *


ہمارے بارے میں

www.maeeshat.in پر ہم اقلیتوں خصوصا  مسلم دنیا میں کاروبار کو متعارف کرانے اور فروغ دینے کا ارادہ رکھتے ہیں جو حلال اور حرام کے حوالے سے اپنے آپ کو ممتاز کرتے ہیں۔ شروع سے ہی اس جریدے/ویب سائٹ نے مسلمان صنعت کاروں اور تاجروں کو قائل کیا ہے کہ وہ ہندوستانی معیشت کو مضبوط بنائیں اور دوسرے کارپوریٹ کے ساتھ اپنے تعلقات کو مزید فروغ دیں۔


CONTACT US

CALL US ANYTIME




نیوز لیٹر